ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Nishat-1 حادثے سے بال بال بچ گیا.    Newly posted SSPs in Punjab police visit PSCA, PPIC3.    "  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.    NA-133 ضمنی انتخاب : جمشید اقبال چیمہ کی اپیلوں پر الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ جاری.   

 حکومت کے خاتمے سمیت افغانستان کی صورتحال میں حالیہ تبدیلی کی توقع نہیں کرسکتا تھا:وزیر خارجہ 

Syed Asad Ali
09 Sep, 2021

09 ستمبر ، 2021

Syed Asad Ali
09 Sep, 2021

09 ستمبر ، 2021

 حکومت کے خاتمے سمیت افغانستان کی صورتحال میں حالیہ تبدیلی کی توقع نہیں کرسکتا تھا:وزیر خارجہ 

post-title

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے یہ بات واضح ہے کہ کوئی بھی افغان سیکیورٹی فورسز کے پیچھے ہٹنے اور حکومت کے خاتمے سمیت افغانستان کی صورتحال میں حالیہ تبدیلی کی توقع نہیں کرسکتا تھا تمام گزشتہ جائزے اور پیش گوئیاں غلط ثابت ہوئیں۔
اسلام آباد میں افغانستان کی صورتحال پر منعقدہ 6 ملکی ورچوئل کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ گزشتہ چند ہفتوں میں ہونے والی پیش رفتوں نے ہمارے خطے کو عالمی منظر نامے پر اجاگر کیا۔
انہوں نے کہا کہ جس طرح صورتحال تبدیل ہوئی اس کے افغانستان، ہمارے خطے اور دنیا پر بھی اثرات ہوں گے۔
شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ان پیش رفتوں کی فوری اور غیر متوقع نوعیت کو مدِنظر رکھتے ہوئے یہ بات اہم ہے کہ بڑے پیمانے پر خونریزی نہیں ہوئی ساتھ ہی طویل تنازعات اور خانہ جنگی کے امکانات ٹل گئے۔
انہوں نے کہا کہ کم از کم اب تک بہت زیادہ بڑے پیمانے پر مہاجرین کا انخلا نہیں ہورہا تاہم ہر طرح سے صورت حال پیچیدہ ہے۔
وزیر خارجہ نے کہا کہ طالبان نے عبوری حکومت کی تشکیل کا اعلان کیا ہے ہم نے اس پیش رفت کو نوٹ کرلیا ہے، ہم اُمید کرتے ہیں کہ سیاسی صورتحال جلد از جلد مستحکم ہو کر معمول کے مطابق ہوجائے گی۔
شاہ محمود قریشی نے کہا کہ افغانستان میں ہوئی حالیہ پیش رفت کے تناظر میں اہم ترجیحات انسانی بحران کو روکنا ہے جو افغانوں کی مشکلات بڑھا سکتا ہے ساتھ ہی ملک میں معاشی بدحالی کو روکنا بھی اتنا ہی اہم ہے۔
انہوں نے کہا کہ اگر انسانی بحران کو روکا جائے اور معاشی استحکام کی یقین دہانی کرائی جائے تو امن مضبوط اور بڑے پیمانے پر انخلا کو روکا جا سکتا ہے۔
وزیر خارجہ نے اس بات پر زور دیا کہ اس ’اہم موڑ‘ پر عالمی برادری کے بڑھتے ہوئے رابطوں کی ضرورت ہے۔
ان کا کہنا تھا کہ ملک میں نئی سفارتی اور بین الاقوامی موجودگی افغان عوام کو یقین دلائے گی اور اقوامِ متحدہ اور اس کے مختلف اداروں کی جانب سے امداد کی فوری فراہمی اعتماد سازی کے عمل کو تقویت بخشے گی۔
وزیر خارجہ نے نشاندہی کی کہ افغانستان کی اس کے مالی وسائل تک رسائی معاشی تباہی کو روکنے اور معاشی سرگرمیوں کو بحال کرنے میں ’اہم‘ ہوگی۔
 


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM