ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Nishat-1 حادثے سے بال بال بچ گیا.    Newly posted SSPs in Punjab police visit PSCA, PPIC3.    "  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.    NA-133 ضمنی انتخاب : جمشید اقبال چیمہ کی اپیلوں پر الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ جاری.   

چشتیاں:گندگی کے ڈھیر میونسپل کمیٹی کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے

رانا عمران افضل
22 Jun, 2022

22 جون ، 2022

رانا عمران افضل
22 Jun, 2022

22 جون ، 2022

چشتیاں:گندگی کے ڈھیر میونسپل کمیٹی کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے

post-title

چشتیاں(رانا عمران افضل) شہر و گردونواح کےعلاقوں میں لگے گندگی کے ڈھیر سیوریج کی پائپ لائن بند ہونے کے باعث گٹروں سے باہر نکلتے پانی نے چشتیاں ایڈمنسٹریٹر بلدیہ و میونسپل کمیٹی کی کارکردگی کا پول کھول دیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق حکومت کی جانب سے کیے جانے والے ترقياتی کام میونسپل کمیٹی کی غفلت و لاپرواہی نے نقصان پہنچانا شروع کردیا شہر میں کھڑا گندا پانی کچرا کنڈی کا منظر پیش کرتا دیکھائی دیتا ہے۔

 گلی محلوں میں کھڑا گندا پانی علاقہ مکینوں کے لیے وبال جان بن گیا چشتیاں شہر و دیگر مضافات علاقوں بالخصوص تاج پورہ میں میونسپل کمیٹی کی لاپرواہی و غفلت کے باعث گلی محلوں میں گندگی کے ڈھیر کچراکنڈی میں تبدیل ہوگئے۔

  شہریوں نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ افسران بلدیہ ملازمین سے اپنے من پسند بندوں کے حلقوں میں روزانہ کی بنیاد پر صفائی کرتے دیکھائی دیتے ہیںاور ہمارے علاقے کو بے یارو مددگار چھوڑ دیا جاتا ہے اہل علاقہ کا گھروں سے نکلنا مشکل ہو گیا ہمارے چھوٹے بچے روز اس گندے پانی میں گرتےہیں۔

گندے پانی سے سارا علاقہ بدبودارہوگیا کئی روز سے گٹروں کے کھڑے پانی سے تعفن پھیل گیا اور گندا پانی  مچھروں کی بھی آماجگاہ بن گیا ہے گٹروں سے نکلتا گندا پانی راہگیروں نمازیوں اور مدرسے کے بچے بچیوں کے لیے وبال جان ہے۔گندگی کے ڈھیر اورسیوریج کا کھڑا گندا پانی مختلف موذی بیماریوں کو جنم دینے لگا ۔

اگر یہی صورتحال رہی تو یقینا اس گندگی سے مختلف بیماریاں پھوٹ پڑیںگی اور اس مہنگائی کے دور میں علاج کروانا پہلےہی مشکل ہے سیوریج کے گندے پانی کے باعث بنائی گئی نئی سڑکیں گندہ پانی کھڑا ہونے کی وجہ سے ٹوٹنے لگی ہے جو ایڈمنسٹریٹر بلدیہ و انتظامیہ کی مبینہ نالائقی وغفلت ہے۔

شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب ، کمشنر بہاولپور اور ڈیٹی کمشنر بہاولنگر سے مطالبہ کیا ہے کہ صفائی و ستھرائی پر خصوصی توجہ دے کر گلی محلوں میں لگے گندگی کے ڈھیر اور سیوریج کے گندے پانی کو صاف کروایا جائے۔تاکہ راہگیروں کا گزرنا آسان اور گندگی سے وابستہ موزی بیماریوں سے محفوظ رہا جاسکے


 

 


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM