ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Nishat-1 حادثے سے بال بال بچ گیا.    Newly posted SSPs in Punjab police visit PSCA, PPIC3.    "  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.    NA-133 ضمنی انتخاب : جمشید اقبال چیمہ کی اپیلوں پر الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ جاری.   

حکومت پنجاب خواتین کو تحفظ دینے میں ناکام، ڈیوٹی کرنا محال ہوگیا

محمد سلیمان
03 Feb, 2022

03 فروری ، 2022

محمد سلیمان
03 Feb, 2022

03 فروری ، 2022

حکومت پنجاب خواتین کو تحفظ دینے میں ناکام، ڈیوٹی کرنا محال ہوگیا

قصور حکومت پنجاب سرکاری ملازم خواتین کو تحفظ دینے میں ناکام ،لیڈی ہیلتھ ورکر اور لیڈی سپروائزر کا ڈیوٹی سر انجام دینا محال ہو گیا۔
 قصور کے نواحی علاقہ سہجرہ کی لیڈی ہیلتھ سپر وائزر ثمینہ کو جان سے مارنے کی دھمکیاں اور ہراساں کیا جانے لگا ،قصور لیڈی ہیلتھ سپر وائزر ثمینہ نے تھانہ گنڈا سنگھ میں درخواست دی کہ اس کے محکمے کا ملازم نائب قاصد رمضان اسےہراساں کرتا اور غلیظ گندی گالیاں دیتا ہے مزید یہ کہ جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دیتا ہے۔
 قصور گنڈا سنگھ پولیس نے فوری کاروائی کرتے ہوئے ملزم کے خلاف ایف آئی آر تو درج کر لی لیکن ایک ماہ سے زیادہ عرصہ گزر جانےکی باوجود تا حال ملزم نہ تو گرفتار ہوا اور نہ ہی کوئی کاروائی ہو سکی ،ثمینہ  نے اعلی حکام سے اپیل کی ہے کی میں ایسے حالات میں ڈیوٹی کیسے کرسکتے ہوں میرا ملزم مجھے جان سے مارنے کی دھمکی دے اورہراساں کرے ۔
واضح رہےایف آئی آر کی باوجودملزم سرعام گھوم رہا ہے اس جلد گرفتار کرکے مجھے انصاف دلایا جائے،محکمے کی جانب سے بھی مجھے سےکوئی تعاون نہیںکیاجا رہا نہ ہی ملزم کے خلاف محکمانہ کاروائی ہو رہی ہے،نمائندے کے مطابق  لیڈی ہیلتھ ورکر اور سپروائزر کی انچارج میڈم ثمرہ مبینہ طور پر ملزم کا ساتھ دے رہی ہے ، میڈم ثمرہ کافی عرصے سے قصور میں تعینات ہیں جو کہ لیڈی ہیلتھ ورکروں کا گروپ بنا کر افسروں کو بھی بلیک میل کرتی ہے۔
 


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM