ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Nishat-1 حادثے سے بال بال بچ گیا.    Newly posted SSPs in Punjab police visit PSCA, PPIC3.    "  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.   

راستے دھرنے سے بند ہوں یا کنٹینرسے، انہیں کھلوانا انتظامیہ کا کام ہے: اسلام آباد ہائیکورٹ

ویب ڈیسک
11 Nov, 2022

11 نومبر ، 2022

ویب ڈیسک
11 Nov, 2022

11 نومبر ، 2022

راستے دھرنے سے بند ہوں یا کنٹینرسے، انہیں کھلوانا انتظامیہ کا کام ہے: اسلام آباد ہائیکورٹ

post-title

اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی نے پی ٹی آئی لانگ مارچ سے متعلق کیس کی سماعت میں ریمارکس دیے کہ راستے دھرنے سے بند ہوں یا کنٹینرسے، انہیں کھلوانا انتظامیہ کا کام ہے۔

اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس محسن اخترکیانی نے  پی ٹی آئی کے لانگ مارچ، اس کے رہنما زاہد اکبر کی گرفتاری اور سب جیل میں رکھنے کے خلاف کیس کی سماعت کی جس دوران چیف کمشنر طلبی کے باوجود عدالت میں پیش نہ ہوئے جب کہ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنراسلام آباد عدالت میں پیش ہوئے۔

دورانِ سماعت جسٹس محسن اختر کیانی نے ریمارکس دیے کہ راستے دھرنے سے بند ہوں یا کنٹینرسے، انہیں کھلوانا انتظامیہ کا کام ہے،  پولیس کی مدعیت میں کیسز بنتے اور چلتے رہتے ہیں،حکومتیں چلی جاتی ہیں، جب کوئی غیرقانونی اقدام کرے گا تو کارروائی ہوگی۔

عدالت نے سوال کیا کہ زاہد اکبرکوکیوں گرفتارکیاگیا اور کیوں سب جیل میں رکھا گیا؟اس پر پراسیکیوٹر نے کہا کہ انڈسٹریل ایریا کے ایس ایچ او نے رپورٹ دی ہے جس میں 
کہا گیا ہے کہ مذکورہ شخص نے جلاؤ گھیراؤ کا کہا ہے، اس پر جسٹس محسن اختر نے پوچھا کہ کیا اسلام آباد میں ایسا کوئی واقعہ ہوا ہے؟ پراسیکیوٹر نے بتایا کہ نہیں سر ابھی اسلام آباد میں کوئی ایسا واقعی نہیں ہوا۔

بعد ازاں عدالت نے زاہد اکبرکو حبس بےجا میں رکھنے سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا جو کچھ دیر بعد سناتے ہوئے زاہد اکبرکی گرفتاری کالعدم قراردے کر انہیں رہا کرنے کا حکم دے دیا۔


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM