ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Nishat-1 حادثے سے بال بال بچ گیا.    Newly posted SSPs in Punjab police visit PSCA, PPIC3.    "  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.   

پی ٹی آئی دھرنا کیس:ڈی جی آئی بی سے رپورٹ طلب، سی پی او نے معافی مانگ لی

ویب ڈیسک
16 Nov, 2022

16 نومبر ، 2022

ویب ڈیسک
16 Nov, 2022

16 نومبر ، 2022

پی ٹی آئی دھرنا کیس:ڈی جی آئی بی سے رپورٹ طلب، سی پی او نے معافی مانگ لی

post-title

راولپنڈی:(اے پی این این )  لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بینچ نے راولپنڈی میں پی ٹی آئی دھرنوں کے باعث راستوں اور تعلیمی اداروں کے بندش کیخلاف کیس میں سی پی او راولپنڈی پر برہمی کا اظہار کیا اور ڈی جی آئی بی سے دھرنوں سے متعلق رپورٹ طلب کر لی۔

لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بینچ میں پی ٹی آئی دھرنوں کے خلاف درخواست پر سماعت جسٹس مرزا وقاص رؤف نے کی، ڈپٹی کمشنر راولپنڈی کیپٹن شعیب، سی پی او شہزاد بخاری او دیگر افسران عدالت میں پیش ہوئے۔

عدالت نے سی پی او راولپنڈی کی دی گئی میڈیکل رپورٹ پر اعتراض کرتے ہوئے کہا کہ سی پی او راولپنڈی اپنی میڈیکل رپورٹ پر ابھی بھی قائم ہے تو ان کے خلاف کارروائی ہوگی، میڈیکل رپورٹ کسی طور عدالت میں پیش نہ ہونے کا جواز پیش نہیں کر رہی، سی پی او سے پوچھیں کیا وہ عدالت میں دی گئی میڈیکل رپورٹ پر قائم ہے۔

وقفے کے بعد سماعت کے دوبارہ آغاز ہوا تو سی پی او راولپنڈی نے میڈیکل رپورٹ پر عدالت سے معافی مانگ لی جس پر عدالت نے سی پی او راولپنڈی پر برہمی کا اظہار کیا جبکہ سی پی او نے عدالت سے 2 بار معافی مانگی۔

عدالت نے ڈپٹی کمشنر سے استفسار کیا کہ کمشنر راولپنڈی کہاں ہیں؟ کیا انہیں معاملے کی حساسیت کا اندازہ نہیں؟ کمشنر سے کہیں اگلی سماعت پر عدالت میں پیش ہوں، عدالت نے پی ٹی آئی احتجاجی دھرنوں پر ڈی جی آئی بی سے رپورٹ طلب کرتے ہوئے کہا کہ ایڈیشنل سیکرٹری داخلہ اور آئی جی موٹروے بھی رپورٹ پیش کریں۔

جسٹس وقاص مرزا نے کہا کہ ڈی جی آئی بی اپنی رپورٹ میں بتائیں کہ احتجاجی دھرنوں کے باعث کیا صورتحال رہی، سی پی او اور ڈی سی راولپنڈی یقینی بنائیں کہ آئندہ دھرنوں سےعوام کو تکلیف نہ ہو اور ڈپٹی کمشنر یقین دلائیں کہ عوام کو کسی قسم کی مشکلات نہ ہوں۔

ڈی آئی جی موٹر وے لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بینچ میں پیش ہوئے جس پر عدالت نے پوچھا کہ احتجاجی مظاہرین نے پوری موٹر وے بلاک کر دی آپ کہاں تھے؟ کوئی بھی 10 بندے آکر موٹروے بند کر دیں تو آپ تماشہ دیکھتے رہیں گے؟۔

عدالت نے کہا کہ لگتا ہے موٹر وے پولیس احتجاجی مظاہرین کو پروٹوکول دیتی رہی، موٹروے قومی شاہراہ ہے، یہاں جنگی طیارے بھی بوقت ضرورت لینڈنگ کرتے ہیں۔

لاہور ہائیکورٹ راولپنڈی بینچ نے کیس کی سماعت 23 نومبر تک ملتوی کر دی۔


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM