ارضِ پاک نیوز نیٹ ورک

Arz-e-Pakistan News Network

Language:

Search

Nishat-1 حادثے سے بال بال بچ گیا.    Newly posted SSPs in Punjab police visit PSCA, PPIC3.    "  لڑکیاں صرف ماں کی کوکھ یا پھر قبر میں محفوظ ہیں" طالبہ نے خودکشی کر لی.    "میں ناگن، تو سپیرا " پوسٹ سوشل میڈیا پر وائرل.    "منی ہائسٹ "(Money Heist )کاآخری حصہ پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج ریلیز کیا جائے گا.    NA-133 کا ضمنی انتخاب.    NA-133 ضمنی انتخاب.    NCA میں "دی سندھو پراجیکٹ اینگما آف روٹس " کے عنوان سے فن پاروں کی نمائش.    KIPS-CSS کی جانب سے CSSمیں کامیاب امیدواروں کے اعزاز میں عشائیہ.    NCA میں ٹریڈیشنل آرٹ کورسز ورکشاپ کی اختتامی تقریب.    NA-75 الیکشن کمیشن کی رپورٹ پر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کا ردعمل.    NA-133 ضمنی انتخاب : جمشید اقبال چیمہ کی اپیلوں پر الیکشن ٹربیونل کا فیصلہ جاری.   

 انقلابی ٹیسٹ جوچند منٹ میں امراض جگر کی تشخیص کر دے

ویب ڈیسک
25 Jul, 2022

25 جولائی ، 2022

ویب ڈیسک
25 Jul, 2022

25 جولائی ، 2022

 انقلابی ٹیسٹ جوچند منٹ میں امراض جگر کی تشخیص کر دے

post-title

برطانوی ماہرین صحت نے خون کی جانچ کا ایسا تیزرفتارطریقہ کارتیارکرلیا ہے جوجگر کی ایسی بیماریوں کا ابتدائی مرحلے میں پتہ لگاسکتا ہے جو آگے چل کراس اہم عضو کونقصان پہنچا سکتی ہیں ۔

ڈیلی میل کے مطابق امراض جگرکی تشخیص کے لیےاس نئے خون کے ٹیسٹ کوانجام دینے میں صرف چند منٹ لگتے ہیں اوریہ بہت حساس ہوتا ہے۔ اس کے برعکس جگر کی بیماریوں کے لیے کیا جانے والا ٹیسٹ ایسی بیماری کا پتا لگانے کا بھی اہل ہے جن کی علامات کافی نمایاں ہوں۔

طد
 

اس نئے ٹیسٹ کی مدد سے موٹاپے کے شکارتقریباً 2 کروڑبرطانوی مستفید ہوسکیں گے۔ جن میں روایتی جانچ سے جگرکی کسی بیماری کا تعین نہیں ہوپاتا اورتشخیص ہونے تک جگرکوناقابل تلافی نقصان پہنچ چکا ہوتا ہے۔

جگر کی بیماری چکنائی اورسوزش کی وجہ سے ہوتی ہے۔ مرض بگڑنے پرجگرکے کینسرکا خطرہ بڑھ جاتا ہے اور مریض کومنتقلی جگر کی ضرورت پیش آسکتی ہے۔

اس ٹیسٹ کوتیارکرنے والے کنگزکالج لندن کے شعبہ برائے ذیابیطس اورغذائیت کے ماہرپروفیسرگیلٹروڈ منگرون کا کہنا ہے کہ ’ جگرکی بیماری ایک خاموش قاتل ہے، مرض بگڑنے تک اس کی کوئی علامات نہیں ہوتیں۔ زیادہ ترلوگ اس موذی بیماری سے اس وقت تک لاعلم رہتے ہیں جب کہ یہ جان لینے کے درپے نہ ہوجائے۔‘

قا
 

خون کی جانچ کے اس نئے طریقہ کارکے ذریعے ہم مریضو ں میں پنپنے والے مرض کی شناخت کرتے ہوئے وزن کم کرنے میں ان کی مدد کر سکیں گے۔

برطانوی قوانین کے مطابق خون کی جانچ کے کسی بھی نئے طریقہ کار کوبرطانیہ کے قومی ادارے برائے صحت سے منظوری اور بڑے کلینیکل ٹرائلزکی ضرورت پیش آتی ہے، لیکن، پروفیسرمنگرون کا کہنا ہے کہ ہمیں امید ہے کہ اس ٹیسٹ کواگلے ایک سے دوسالوں مین عوامی استعمال کی منظوری مل جائے گی۔
 


APNN نیوز، APNN گروپ یا اس کی ادارتی پالیسی کا اس تحریر کے مندرجات سے متفق ہونا ضروری نہیں ہے۔

APNN News, the APNN Group or its editorial policy does not necessarily agree with the contents of this article.


عوامی بحث (0) تبصرے دیکھنے کے لئے کلک کریں Public discussion (0) Click to view comments
28 / 5 / 2021
Monday
1 : 23 : 31 PM